آئی اے ٹی اے کے کاروباری منصوبے میں پی آئی اے کو 2026 تک منافع کمانے کا امکان ہے۔ - Baithak News

آئی اے ٹی اے کے کاروباری منصوبے میں پی آئی اے کو 2026 تک منافع کمانے کا امکان ہے۔

بین الاقوامی ہوا بازی کی فرم، IATA کنسلٹنسی نے پاکستان انٹرنیشنل ایئرلائن (PIA) کے لیے ایک کاروباری منصوبہ پیش کیا ہے، جس پر عمل درآمد ہونے کی صورت میں خسارے میں جانے والا سرکاری ادارہ 2025 تک اپنے آپریشنز کو بھی توڑ دے گا اور اگلے سال ریکارڈ 3.4 فیصد منافع کمائے گا۔

2022 سے 2026 تک کا جامع بزنس پلان منگل کو وزیر خزانہ اور ریونیو شوکت ترین اور وزیر ہوا بازی غلام سرور خان کو پیش کیا گیا۔

اجلاس میں سیکرٹری ایوی ایشن، سیکرٹری خزانہ، سیکرٹری ای اے ڈی، پی آئی اے بورڈ آف ڈائریکٹرز اور ممبران، پی آئی اے کے سی ای او اور سینئر افسران نے بھی شرکت کی۔

اس منصوبے پر عمل درآمد سے پی آئی اے کے اثاثے موجودہ 1.196 بلین ڈالر سے بڑھ کر 2026 تک 2.183 بلین ڈالر ہو جائیں گے۔

پی آئی اے کو مالی سال 2020 میں 34.6 بلین روپے کا نقصان ہوا۔ ماہرین کا خیال ہے کہ مالی سال 2021 میں نقصانات میں نمایاں اضافہ ہوا ہے کیونکہ وبائی امراض اور اس سے بھی اہم بات یہ ہے کہ جعلی پائلٹ لائسنس سکینڈل کے بعد ہونے والے واقعات کا سلسلہ جس میں پاکستانی پائلٹس کو نااہل قرار دیا گیا۔ امریکہ اور یورپ جانے کے لیے۔

وزارت خزانہ نے گزشتہ سال وزیر اعظم کے سابق خصوصی مشیر برائے پبلک انٹرپرائزز ریفارمز ڈاکٹر عشرت حسین کی رپورٹ کے نتیجے میں منصوبہ تیار کرنے کا کمیشن دیا تھا۔

ڈاکٹر عشرت کی رپورٹ کو پی آئی اے کے لیے ایک مکمل تنظیم نو کا منصوبہ بھی قرار دیا گیا تاکہ اسے منافع بخش بنایا جا سکے، بلکہ اس کے بنیادی آپریشنز پر توجہ مرکوز کرتے ہوئے اسے ایک مناسب کاروباری یونٹ بھی بنایا جائے۔

اس منصوبے میں سیکڑوں ارب روپے کی مالیاتی تنظیم نو شامل تھی، وزارت خزانہ اور پلاننگ کمیشن کے حکام نے پی آئی اے کے لیے بین الاقوامی کنسلٹنٹ کے ذریعے تیار کردہ بزنس پلان کا مطالبہ کیا۔

مزید جانیں

مزید پڑھیں

صارفین کو ریلیف کی فراہمی کیلئے اقدامات اُٹھائے جارہے ہیں:محمد ارشد

حکومت پنجاب کی ہدایت پراشیاء ضروریہ کی مقررہ نرخوں پرفراہمی کو یقینی بنایاجائے لیہ( بیٹھک رپورٹ )ضلع میں صارفین کو ریلیف کی فراہمی کے لئے اقدامات اُٹھائے جارہے ہیں تاکہ صارفین کو سستی اشیاء خورد نوش فراہم کی جاسکیںاس سلسلہ مزید پڑھیں

اپنا تبصرہ بھیجیں