حکومت تمباکو مصنوعات پر ہیلتھ لیوی کے نفاذ کو یقینی بنائے، ملک عمران احمد - Baithak News

حکومت تمباکو مصنوعات پر ہیلتھ لیوی کے نفاذ کو یقینی بنائے، ملک عمران احمد

ملتان (وقائع نگار) حکومت تمباکو کی مصنوعات پر ہیلتھ لیوی کے نفاذ کو یقینی بنا ئے،غریب گھرانوں میں تمباکو کا استعمال صحت کی دیکھ بھال کے اخراجات میں اضافہ آمدنی میں کمی اور پیداواری صلاحیت میں کمی کے ساتھ ساتھ خاندان کے محدود وسائل کو بنیادی ضروریات اور غذائیت اور تعلیم میں سرمایہ کاری سے ہٹا کر غربت میں اضافہ کرتا ہے، سگریٹ کا دھواں نوزائیدہ بچوں اور بچوں میں صحت کے متعدد مسائل کا باعث بنتا ہے، جن میں زیادہ بار بار اور شدید دمہ کے حملے سانس کے انفیکشن کان میں انفیکشن اور اچانک بچوں کی موت کا سنڈروم شامل ہیں ان خیالات کا اظہار ماہرین نے سماجی تنظیم سپارک کے زیر اہتمام تمباکو مصنوعات پر ہیلتھ لیوی کی اہمیت اجاگر کرنے کے لیے ایک آن لائن بریفنگ سیشین کے دوران کیا، اس موقع پر کمپین فار’ٹوبیکو فری کڈز کے کنٹری ہیڈ ملک عمران احمد نے کہا کہ تمباکو سے پاکستانی معیشت پر ہر سال صحت پر 615 بلین روپے کا بوجھ آتا ہے جبکہ تمباکو کی صنعت سے حاصل ہونے والی ا?مدنی 115 بلین روپے ہے، انہوں نے حکومت سے درخواست کہ وہ تمباکو کی مصنوعات پر ہیلتھ لیوی کے نفاذ کو یقینی بنایاکیونکہ اس سے حکومت کو مزید آمدنی حاصل ہوگی، جو خصوصی طور پر پائیدار ترقی کے صحت کے اہداف پوری کرنے اور صحت کے معیار کو بلند کرنے کے لیے استعمال کیا جا سکتا ہے۔
انہوں نے اسٹاپ سروے 2020 کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ پاکستانی سگریٹ نوشی اپنی اوسط ماہانہ آمدنی کا 10 فیصد سگریٹ پر خرچ کرتے ہیں، غریب گھرانوں میں تمباکو کا استعمال صحت کی دیکھ بھال کے اخراجات میں اضافہ آمدنی میں کمی اور پیداواری صلاحیت میں کمی کے ساتھ ساتھ خاندان کے محدود وسائل کو بنیادی ضروریات اور غذائیت اور تعلیم میں سرمایہ کاری سے ہٹا کر غربت میں اضافہ کرتا ہے،سیشن سے اپنے خطاب میں سپارک کے پروگرام مینیجر خلیل احمد ڈوگر نے کہا کہ پاکستان میں بچوں میں سگریٹ نوشی ایک فیشن بن چکی ہے، روزانہ 1200 بچے سگریٹ نوشی شروع کرتے ہیں، 5 میں سے 2 بچے 10 سال کی عمر سے پہلے سگریٹ نوشی کرتے ہیں، بچوں پر سگریٹ نوشی کے اثرات ناقابل تردید ہیں، پانچ سال سے کم عمر کے دس میں سے چار بچوں کا قد بڑھا ہوا ہے اور 17.7 فیصد قد کے مقابلے میں کم وزن کا شکار ہیں، غذائی قلت کا دوہرا بوجھ تیزی سے ظاہر ہوتا جا رہا ہے، تقریباً تین میں سے ایک بچہ یعنی 28.9فیصد کا وزن کم ہے،اس گروپ میں زیادہ وزن والے بچوں کی تعداد زیادہ ہے یعنی 9.5 فیصد جبکہ ہاتھ کا دھواں نوزائیدہ بچوں اور بچوں میں صحت کے متعدد مسائل کا باعث بنتا ہے جن میں زیادہ بار بار اور شدید دمہ کے حملے سانس کے انفیکشن کان میں انفیکشن اور اچانک بچوں کی موت کا سنڈروم شامل ہیں، انہوں نے مزید کہا کہ ہیلتھ لیوی کے نفاذ سے محکمہ صحت کو فنڈز فراہم کرنے میں مدد ملے گی اور ملک کے لیے ا?مدنی پیدا ہو گی جو ان بچوں کے لیے غذائی قلت سے لڑنے کے لیے استعمال ہو سکتی ہے، کرومیٹک ٹرسٹ کے سی ای او شارق محمود خان نے کہا کہ تمباکو کا استعمال غیر منتقلی بیماریوں جیسے کہ پھیپھڑوں کے کینسر اور دل کی بیماری میں اہم کردار ادا کرتا ہے مزید برا?ں تمباکو کا استعمال کافی معاشی اخراجات پیدا کرتا ہے تمباکو کا استعمال کافی معاشی اخراجات پیدا کرتا ہے جیسے کہ تمباکو کا استعمال کرنے والے لوگوں اور تمباکو کے دھوئیں سے متاثر ہونے والے لوگوں میں ان بیماریوں کے علاج کے لیے صحت کی دیکھ بھال پر بڑھتا ہوا خرچ نیز یہ بیماری اور جلد موت کی وجہ سے پیداواری صلاحیت اور ا?مدنی میں کمی کا سبب بنتا ہے، انہوں نے مزید کہا کہ ہیلتھ لیوی اضافی ا?مدنی پیدا کرے گاتمباکو کے استعمال کی لاگت کو کم کرے گااور تمباکو کی مجموعی استعمال کو کم کرے گا۔

مزید جانیں

مزید پڑھیں

صارفین کو ریلیف کی فراہمی کیلئے اقدامات اُٹھائے جارہے ہیں:محمد ارشد

حکومت پنجاب کی ہدایت پراشیاء ضروریہ کی مقررہ نرخوں پرفراہمی کو یقینی بنایاجائے لیہ( بیٹھک رپورٹ )ضلع میں صارفین کو ریلیف کی فراہمی کے لئے اقدامات اُٹھائے جارہے ہیں تاکہ صارفین کو سستی اشیاء خورد نوش فراہم کی جاسکیںاس سلسلہ مزید پڑھیں

اپنا تبصرہ بھیجیں