عمران خان اپنی نااہلی کا اعتراف، بلاتاخیر استعفیٰ دےدیں: راو ظفر - Baithak News

عمران خان اپنی نااہلی کا اعتراف، بلاتاخیر استعفیٰ دےدیں: راو ظفر

ملتان (خصوصی رپورٹر)امیر جماعت اسلامی جنوبی پنجاب راو¿ ظفر نے کہا ہے کہ عمران خان سرکار کے 4سال عوام کیلئے معاشی بدحالی، تباہی، مہنگائی کے سونامی، ملکی قرضوں کے بوجھ، معیارِ زندگی کی گراوٹ، اشیائے خورد و نوش اور اشیائے ضروریہ کی مسلسل گرانی کا ایک بھیانک باب ہے۔ 2018 ء کے انتخابات کے نتیجے میں اقتدار میں آنےوالی پی ٹی آئی حکومت کے عوام پر مسلسل مہنگائی بم حملوں نے غریب، لوئر مڈل کلاس اور سفید پوش طبقہ کو غربت اور بے روزگاری کے اندھیروں میں دھکیل دیا ہے۔ پہلے عوام اپنے بچوں کی تعلیمی ضروریات کےلئے فکر مند تھے تو اب آٹا، چینی، گھی، پٹرول، بجلی، گیس جیسی بنیادی ضروریاتِ زندگی کے حصول کےلئے ترستے رہ گئے ہیں۔ تبدیلی کے نام پر عوام سے خوشحالی کا وعدہ کرنےوالی پی ٹی آئی نے عوام کو بدحال اور نڈھال کرکے رکھ دیا ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے اسلامک سنٹر میں ایک روزہ ٹریننگ ورکشاپ برائے ضلعی ذمہ داران خانیوال اور لیہ سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے مزید کہا کہ پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں حالیہ اضافہ بھی زمینی حقائق کے برعکس ہے۔ عالمی مارکیٹ میں تیل کی قیمتوں میں کمی کا رجحان ہے جبکہ حکومت نے بلاسوچے سمجھے عوام پر پٹرول بم گراکر انہیں فاقہ کشی پر مجبور کردیا ہے۔ غربت کے ہاتھوں مجبور عوام اپنے معصوم بچوں،بچیوں کو دریا برد کرنے یا بیچنے پر مجبور ہیں لیکن بے حس حکمرانوں کے دل پتھر کے ہوگئے ہیں۔ انہیں اپنی مجبور اور بے بس عوام پر ذرا بھی ترس نہیں آتا بلکہ اسکے برعکس آئی ایم ایف کی تابعداری میں آئے روز مہنگائی بم گرانے پر تلے ہوئے ہیں۔ عوام کے پاس جماعت اسلامی کے سوا کوئی دوسرا آپشن نہیں رہا۔ قبل از وقت انتخابات ہی ملک کو معاشی، سیاسی، سلامتی بحرانوں سے نکالنے کا واحد راستہ ہے۔ عمران خان اپنی نااہلی کا اعتراف کرتے ہوئے بلاتاخیر استعفیٰ دےدیں۔ اب عوامی عدالت ہی اقتدار کےلئے اہلیت رکھنے والے اصل حکمرانوں کا فیصلہ کرے گی۔

مزید جانیں

مزید پڑھیں

صارفین کو ریلیف کی فراہمی کیلئے اقدامات اُٹھائے جارہے ہیں:محمد ارشد

حکومت پنجاب کی ہدایت پراشیاء ضروریہ کی مقررہ نرخوں پرفراہمی کو یقینی بنایاجائے لیہ( بیٹھک رپورٹ )ضلع میں صارفین کو ریلیف کی فراہمی کے لئے اقدامات اُٹھائے جارہے ہیں تاکہ صارفین کو سستی اشیاء خورد نوش فراہم کی جاسکیںاس سلسلہ مزید پڑھیں

اپنا تبصرہ بھیجیں