ملتان(سٹی رپورٹر)ضلع کونسل ملتان میں 2 سال کے دوران پبلسٹی فیس کے ٹھیکوں کی نیلامی میں 1 کروڑ 90 لاکھ روپے کے گھپلوں کا انکشاف - Baithak News

ملتان(سٹی رپورٹر)ضلع کونسل ملتان میں 2 سال کے دوران پبلسٹی فیس کے ٹھیکوں کی نیلامی میں 1 کروڑ 90 لاکھ روپے کے گھپلوں کا انکشاف

پچھلے مالی سال کے نیلام شدہ ٹھیکے میں 90 لاکھ روپے کے ڈیفالٹر ٹھیکیدار کی 30 لاکھ روپے کی سیکورٹی ضبط کر کے اس کو کلین چٹ دے کر 60 لاکھ روپے کے بقایاجات وصول نہیں کئے گئے

اس کرپشن کو چھپانے کیلئے مجاز افسران نے دعویٰ کیا کہ باقی رقم ٹھیکیدار کے ڈیفالٹرز بنکوں سے وصول کرکے 90 لاکھ روپے کی ریکوری مکمل کرلی جائیگی۔اس حوالے سے ذرائع نے بتایا کہ سرکار کے ڈیفالٹر ٹھیکیدار نے ضلع کونسل انتظامیہ کی ملی بھگت سے بینکوں سے 90 فیصد پبلسٹی فیس پہلے ہی وصول کر لی تھی۔ مجاز افسران کیطرف سے بنکوں سے کھاتے پورا کرنے کےدعوے میں صداقت نہیں ۔اسی طرح ضلع کونسل ملتان کی انتظامیہ نے رواں مالی سال میں پبلسٹی فیس کا ٹھیکہ اوپن نیلامی ٹھیکیداروں میںسخت مقابلے کے بعد ضابطہ خان گروپ کو 2 کروڑ 56 لاکھ روپے میں سب سے زیادہ بولی پر الاٹ کیا مگر بعدمیں ضلع کونسل ملتان کےمجاز افسروں نےالاٹی ٹھیکیدار سےااندرخانےملی بھگت کرکےاس ٹھیکے اوپن نیلامی میں دی گئی
بولی میں 1 کروڑ روپےکی کمی کرکےٹھیکہ 1 کروڑ56 لاکھ روپےکردیا۔سرکاری خزانے کو 1 کروڑ روپے کا جھٹکا لگانے کی مخبری کمیشن میں حصہ نہ ملنے پر ضلع کونسل ملتان کےبعض اہلکاروں نےٹھیکےکی دوسرے نمبر پر 2 کروڑ 55 لاکھ روپےبولی لگانےوالےٹھیکیدار قاسم قریشی کو کردی جسکےبعدقاسم قریشی نے ٹھیکہ نہ ملنے کا افسروں سےبدلہ لینے کیلئےاعلیٰ حکام کوٹھیکےمیں ہونیوالی کرپشن سےآگاہ کیا۔جب شنوائی نہ ہوئی تو قاسم قریشی نے ہائیکورٹ میں ٹھیکہ کینسل کرنے کی درخواست دیدی۔
اس پر عدالت عالیہ نے کاروائی کرتے ہوئےکمشنرملتان کو ضلع کونسل ملتان کے 2 سالوں میں ہونے والےپبلسٹی فیس کے ٹھیکوں میں ہونے والی مالی بے ضابطگیوں کی تحقیقات کرکے رپورٹ پیش کرنے کا حکم جاری کیا۔ آرڈر کی روشنی میں کمشنر ملتان نے کیس کے حقائق جاننے کے لئے اے ڈی سی جی رانا اخلاق کو انکوائری کرکے فیکٹ فائنڈنگ رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت جاری کی۔ اس حوالے سے ذرائع نے بتایا ہے کہ انکوائری میں ٹھیکوں کے حوالےسے مالی بے ضابطگیوں کی نشاندہی کرکے رپورٹ کمشنر ملتان کو پیش کردی گئی۔ذرائع نے بتایا ہے معاملہ کمشنر اور ہائیکورٹ تک جانے سے روکنے کیلئے مبینہ طور ملوث افسران اور درخواست دھندہ ٹھیکیدار قاسم قریشی کے درمیان ڈیل طے کرنے کیلئے خفیہ مذاکرات جاری ہیں مگر ابھی تک ڈیل نتیجہ خیز ثابت نہیں ہوسکی۔
اس حوالے سے ضلع کونسل ملتان کے ڈسٹرکٹ آفیسر فنانس لیاقت علی نے موقف دیتے ہوئے کہاکہ ڈیفالٹرٹھیکیدار سے 90 لاکھ کے بقایاجات کی وصولی کیلئے اسکے ڈیفالٹرز بنکوں کواسے پبلسٹی فیس کی ادائیگی کرنے سےروک دیاگیاہے، مطلوبہ رقم پوری کرلی جائے گی۔ انہوں نے رواں سال کے ٹھیکہ کے حوالے سے مبینہ کرپشن بارے کہا کہ ٹھیکیدار کے ٹھیکے میں 1 کروڑ روپے کی کمی اسلئے کی گئی ہے کیونکہ اسکی مقررہ حدود میں شامل 14 یونین کونسلوں کو پی ایچ اے نے اپنے ٹھیکے کے ایریا میں شامل کرلیا تھا۔جس پر ٹھیکیدار کے ٹھیکے کی مجموعی رقم میں اوسط بناکر کمی کی گئی ہے مگر ذرائع نے بتایا ہے کہ اس صورتحال میں نیلام شدہ ٹھیکہ منسوخ کرکے اس کی دوبارہ نیلامی کرائی جاتی ہے،ٹھیکے کی رقم میں کمی کرنا قانون کے منافی ہے۔

پنجاب حکومت عمران خان کے لانگ مارچ کا حصہ نہیں بنے گی، وزیر داخلہ پنجاب

Shakira could face 8 years in jail

پاکستان میں صحت عامہ کی صورتحال تباہی کے دہانے پر ہے، عالمی ادارہ صحت

اپنا تبصرہ بھیجیں