ملتان میں ججز اور وکلا خوش ہیں، چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ - Baithak News

ملتان میں ججز اور وکلا خوش ہیں، چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ

ملتان(بیٹھک رپورٹ)چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ جسٹس محمدامیربھٹی نے ڈسٹرکٹ بار ایسوسی ایشن ملتان کے نو منتخب عہدیداران کی تقریب حلف برداری کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ بار اور بنچ کے درمیان ہم آہنگی ضروری ہے اور ملتان میں بار اور بنچ میں مثالی تعلقات کار قائم ہیںجو قابل ستائش ہیں۔ججز وکلاءسے اور وکلاءججز سے خوش ہیں، سب کام کر رہے ہیں،اور یہ بہت اہم مثا ل ہے ، میں چاہتا ہوں کہ پورے پنجاب میں اس کی تقلیدہو۔ انہوں نے کہا کہ حکومت نے سوا5ارب روپے کی لاگت سے جوڈیشل کمپلیکس ملتان کی تعمیر کی منظوری دے دی ہے، جو 36 ماہ میں مکمل تعمیر ہو جائے گا۔ جوڈیشل کمپلیکس میں 80 کورٹ رومز، دس لفٹس، ایک بخشی خانہ، اور مسجد ہال تعمیر کیا جائے گا۔ ملتان کچہری میں پارکنگ پلازہ کے منصوبے کےلئے پنجاب حکومت نے بجٹ میں فنڈز نہیں رکھے تھے، لیکن ان کی کاوش سے بارہ منزلہ کار پارکنگ کی ایک ہزار چار سو ملین روپے کے سپلیمنٹری بجٹ کی منظوری دے دی گئی ہے۔ چیف جسٹس نے ملتان بار روم، لیڈیز بار روم اور لائبریری کی تزئین و آرائش کا کام جلد شروع کر دیا جائے گا، انہوں نے کہا کہ مارچ میں سول ججز اور ایڈیشنل سیشن ججز کیلئے امتحانات لیں گے، نوجوان وکلاءامتحانات کی تیاری کریں تاکہ اس خطے سے زیادہ ججز بھرتی ہو سکیں، انہوں نے کہا کہ اس وقت پنجاب بھر میں سول عدالتوں میں ساڑھے پانچ سو سول ججز اور 150 ایڈیشنل سیشن ججز کی آسامیاں خالی ہیں، ججز کی کمی کے باعث سول ججز پر کام کا بوجھ ہے، ملتان میں 70 آسامیاں ہیں جن میں سے صرف 35 ججز کام کر رہے ہیں، چیف جسٹس نے کہا کہ ملتان میں ممبر بورڈ آف ریونیو اور سروس ٹریبونل کو شفٹ کرنے کے لیے وہ جسٹس عاطف محمود سے بات کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ 240 چیمبرز بنائے جائیں گے، جبکہ شجاع آباد بار روم کی توسیع کی منظوری دے دی گئی ہے جس پر 20 ملین روپے خرچ ہوں گے اور یہ چھ ماہ میں مکمل ہو گا۔ چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ جسٹس محمد امیر بھٹی نے سابق چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ قاسم خان کی خدمات کو سراہتے ہوئے کہا کہ انہوں نے ملتان کے لیے نیو جوڈیشل کمپلیکس اور ضلع کچہری ملتان کے توسیعی منصوبے کے کام کا عمل شروع کیا جسے وہ جسے وہ آگے بڑھا رہے ہیں۔ اور جلد پایہ تکمیل تک پہنچ جائے گا۔ چیف جسٹس نے کہا کہ انہوں نے ملتان میں ملک نور محمد ایڈووکیٹ کے چیمبر سے اپرنٹس شپ شروع کی۔اور اپنے سینئر وکلاءسے بہت کچھ سیکھا ہے۔ نوجوان وکلاءقانون دان بننے کے لیے سخت محنت کریں اور مقام حاصل کریں۔ صدر بار ملتان محمد وسیم خان بابر ایڈووکیٹ نے سپاسنامہ پیش کیا اور مطالبات پیش کرتے ہوئے کہا کہ جوڈیشل کمپلیکس ملتان کے حوالے سے مسائل حل کئے جائیں، خواتین وکلاءکے لیے ڈسٹرکٹ بار میں ڈے کئیر سنٹر بنایا جائے۔ پارکنگ پلازہ تعمیر کیا جائے۔ قبل ازیں مہمان خصوصی چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ جسٹس محمد امیر بھٹی نے نومنتخب عہدے داران سے حلف لیا۔ تلاوت قرآن پاک محمد حسین بابر نے کی۔ نقابت کے فرائض جنرل سیکرٹری بار چودھری محمد ارشد صابر نے انجام دی۔ نعت رسول مقبول صلی اللہ علیہ وسلم کے حضور محترمہ حفضہ رحمان نے پیش کیا۔ تقریب میں ڈسٹرکٹ سیشن جج ملتان، ماتحت عدلیہ کے ارکان، ممبران پنجاب بار کونسل، پنجاب وکلاءمحاذ، سینئر وکلاءسمیت ممبران ڈسٹرکٹ بار کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔ تقریب حلف برداری کو بڑی سکرین لگا کر شرکاءکو دکھایا گیا۔

مزید جانیں

مزید پڑھیں

صارفین کو ریلیف کی فراہمی کیلئے اقدامات اُٹھائے جارہے ہیں:محمد ارشد

حکومت پنجاب کی ہدایت پراشیاء ضروریہ کی مقررہ نرخوں پرفراہمی کو یقینی بنایاجائے لیہ( بیٹھک رپورٹ )ضلع میں صارفین کو ریلیف کی فراہمی کے لئے اقدامات اُٹھائے جارہے ہیں تاکہ صارفین کو سستی اشیاء خورد نوش فراہم کی جاسکیںاس سلسلہ مزید پڑھیں

اپنا تبصرہ بھیجیں