وفاقی حکومت نے احساس کفالت وظیفہ کو بڑھا کر 13,000 روپے کر دیا۔ - Baithak News

وفاقی حکومت نے احساس کفالت وظیفہ کو بڑھا کر 13,000 روپے کر دیا۔

یکم فروری سے حکومت نے احساس کفالت وظیفہ 12 ہزار سے بڑھا کر 13 ہزار کردیا، ایس اے پی ایم ڈاکٹر ثانیہ نشتر نے اعلان کیا۔

سینیٹر اور وزیر اعظم پاکستان کی معاون خصوصی برائے تخفیف غربت اور سماجی تحفظ ڈاکٹر ثانیہ نشتر نے ایک ویڈیو پیغام میں کہا۔
انہوں نے پاکستان کے غریب طبقے کے لیے احساس کفالت وظیفہ میں غیر قانونی کٹوتیوں کے ساتھ ایجنٹوں کے لیے سخت کارروائی کا بھی اعلان کیا۔

مزید برآں، سینیٹر اور وزیراعظم پاکستان کی معاون خصوصی برائے تخفیف غربت اور سماجی تحفظ ڈاکٹر ثانیہ نشتر نے کہا:

“اب، جب بھی احساس کفالت پروگرام کے لیے اہل خواتین اپنے پیسے لینے جائیں، اسے گنیں اور 13,000 روپے لیں۔”

مزید، غربت کے خاتمے اور سماجی تحفظ پر پاکستان کی سینیٹر اور SAPM ڈاکٹر ثانیہ نشتر نے کہا:

“حکومت احساس کفالت کے تحت غریبوں کو دی جانے والی رقم میں کمی کرنے والوں کے خلاف کریک ڈاؤن کرے گی۔”

وزیر اعظم پاکستان کی معاون خصوصی برائے غربت کے خاتمے اور سماجی تحفظ سینیٹر ڈاکٹر ثانیہ نشتر کا مکمل ویڈیو پیغام یہاں دیکھیں:

حکومت کے مطابق وظیفہ میں اضافے سے 80 لاکھ مستحق خاندان مستفید ہوں گے۔ وفاقی حکومت سال میں دو بار 13 ہزار روپے کی مالی امداد دے گی۔

غربت کے خاتمے اور سماجی تحفظ کے بارے میں وزیراعظم کی معاون خصوصی ڈاکٹر ثانیہ نشتر نے کہا کہ وفاقی حکومت ہر سال 12 سے 14 ارب روپے کے اضافی اخراجات برداشت کرے گی۔

اس سے قبل گزشتہ سال دسمبر میں، ایشیائی ترقیاتی بینک (ADB) نے حکومت کے مہتواکانکشی احساس سماجی تحفظ کے پروگرام کو مضبوط اور وسعت دینے میں مدد کے لیے 603 ملین ڈالر کے قرض کی منظوری دی تھی۔

ADB نے کہا:

“انٹیگریٹڈ سوشل پروٹیکشن ڈویلپمنٹ پروگرام کے تحت، ہم ایشین ڈویلپمنٹ فنڈ سے 600 ملین ڈالر کا قرض اور 3 ملین ڈالر کی گرانٹ فراہم کریں گے، اور ایجوکیشن اباوو آل فاؤنڈیشن سے 24 ملین ڈالر کی گرانٹ کا انتظام کریں گے۔”

مزید جانیں

مزید پڑھیں

صارفین کو ریلیف کی فراہمی کیلئے اقدامات اُٹھائے جارہے ہیں:محمد ارشد

حکومت پنجاب کی ہدایت پراشیاء ضروریہ کی مقررہ نرخوں پرفراہمی کو یقینی بنایاجائے لیہ( بیٹھک رپورٹ )ضلع میں صارفین کو ریلیف کی فراہمی کے لئے اقدامات اُٹھائے جارہے ہیں تاکہ صارفین کو سستی اشیاء خورد نوش فراہم کی جاسکیںاس سلسلہ مزید پڑھیں

اپنا تبصرہ بھیجیں