پاکستان روس، چین، قازقستان سے قرضہ مانگے گا۔ - Baithak News

پاکستان روس، چین، قازقستان سے قرضہ مانگے گا۔

اسلام آباد: وفاقی حکومت نے چین، روس اور قازقستان سے 5 بلین ڈالر قرض لینے کا فیصلہ کیا ہے کیونکہ یہ ملک غیر ملکی زرمبادلہ کے ذخائر کو مستحکم کرنے کے لیے بے چین کوششیں کر رہا ہے۔

پاکستان چین سے 3 ارب ڈالر اور روس اور قازقستان سے 2 ارب ڈالر قرض لینے کا ارادہ رکھتا ہے۔

اس معاملے سے باخبر ذرائع نے بتایا کہ وزارت خزانہ نے قرض کے منصوبے کو حتمی شکل دے دی ہے اور اس سلسلے میں ممکنہ طور پر چین کے ساتھ معاہدے پر وزیراعظم عمران خان کے آئندہ ماہ بیجنگ کے دورے کے دوران دستخط کیے جائیں گے۔

اسلام آباد ML-1 ریلوے منصوبے پر 2 بلین ڈالر خرچ کرنے کی منصوبہ بندی کر رہا ہے جبکہ چین سے ملنے والے 3 بلین ڈالر گرتے ہوئے زرمبادلہ کے ذخائر کو مضبوط کرنے کے لیے استعمال کیے جائیں گے۔
ابتدائی طور پر وزارت خزانہ کے ذرائع نے مزید کہا کہ چین کے ساتھ قرض کے معاہدے پر ایک سال کی مدت کے لیے دستخط کیے جائیں گے۔

یہ پیش رفت بین الاقوامی مالیاتی فنڈ کے رکے ہوئے 6 بلین قرض کے پروگرام کو بحال کرنے کے لیے اسلام آباد کی بھرپور کوششوں کے درمیان سامنے آئی ہے کیونکہ 02 فروری کو ہونے والے ایگزیکٹو بورڈ کے اجلاس سے قبل اس سلسلے میں تمام پیشگی شرائط کو پورا کر لیا گیا ہے۔

مزید جانیں

مزید پڑھیں

صارفین کو ریلیف کی فراہمی کیلئے اقدامات اُٹھائے جارہے ہیں:محمد ارشد

حکومت پنجاب کی ہدایت پراشیاء ضروریہ کی مقررہ نرخوں پرفراہمی کو یقینی بنایاجائے لیہ( بیٹھک رپورٹ )ضلع میں صارفین کو ریلیف کی فراہمی کے لئے اقدامات اُٹھائے جارہے ہیں تاکہ صارفین کو سستی اشیاء خورد نوش فراہم کی جاسکیںاس سلسلہ مزید پڑھیں

اپنا تبصرہ بھیجیں