پاکپتن کے لأ کا لج کی بھی جعلی انرولمنٹس، گورنر پنجاب کا فوری کاروائی کا حکم - Baithak News

پاکپتن کے لأ کا لج کی بھی جعلی انرولمنٹس، گورنر پنجاب کا فوری کاروائی کا حکم

ملتان (ارشد ملک)ایل ایل بی 3 سالہ پروگرام، بوگس انرولمنٹ کی تعداد سنڈیکیٹ میں پیش کی گئی تعداد سے بھی تجاوزکر گئی، گورنر پنجاب نے زکریایونیورسٹی کے وی سی، کنٹرولر اور رجسٹرار کو لاہور طلب کر کے ذمہ داران کےخلاف فوری کارروائی کا حکم دےدیا، رجسٹرار کی مبینہ ملی بھگت سے سابقہ تاریخوں میں بوگس رجسٹریشن کرنےوالے اپنے کارندوں کو بچانے کی ہر ممکن کوشش، “بیٹھک” نے تمام طلبہ جنہیں بوگس انرولمنٹ جاری کی گئی کی مکمل لسٹ حاصل کر لی۔ ملتان، مظفرگڑھ، ڈی جی خاں، خانیوال، بورے والا اور ساہیوال کے لاءکالجز کے علاوہ پاکپتن کے ایک بوگس لاءکالج کے 73 طلبہ کو بھی جعلی انرولمنٹ جاری کی گئی، تعلیمی حلقوں کا سخت کارروائی کا مطالبہ، تفصیل کے مطابق بہاءالدین زکریا یونیورسٹی میں 400 فیل طلباءو طالبات کو گریجوایشن میں جعلسازی سے پاس کرانے والوں کے خلاف قانونی کارروائی نہ کرنے کے نتیجے میں اسی مبینہ طور کرپٹ ٹولے نے ایل ایل بی تین سالہ پروگرام کے پارٹ فرسٹ دوسرے سالانہ امتحان 2019 میں کروڑوں روپے بٹور کر بوگس انرولمنٹ جاری کیں، ان طلبہ کی تعداد 15 جنوری2022 کو منعقد ہونے والے سینڈیکیٹ کے اجلاس میں پیش کی گئی تعداد سے بھی تجاوز کر گئی ہے ۔روزنامہ بیٹھک کے مصدقہ ذرائع کے مطابق علامہ اقبال لاءملتان کے طلبہ محمد وقاص علی ولد محمد یوسف رجسٹریشن نمبر 2016۔ALM۔224، قیاس الحسن ولد ابرار احمد 2016۔ALM۔227، جواد اصغر ولد حاجی محمد اصغر 2016۔ALM۔225، صیام الحسن ولد محمد حسین 2016۔ALM۔226، محمد عثمان اکرم ولد محمد اکرم 2016۔ALM۔228، عمر فرحان ولد محمود احمد 2016۔ALM۔ 218، نعیم خان ولد صابر گل 2017۔ALM۔219، محمد فیصل ولد ریاض حسین2018۔ALM۔207،محمد منیب بلال ولد احمد یار2018۔ almanac محمد سرور ولد فتح شیر 2016۔ALM۔236 سمیت 58 طلبہ کے نام شامل ہیں اس طرح نور لاءکالج ملتان کے 177 طلبہ کو بوگس انرولمنٹ جاری کی گئی جس کی لسٹ خبریں کو موصول ہو چکی ہے، علاوہ ازیں پروفیشنل لاءکالج ملتان کا مالک جو کہ ولایت حسین کالج میں لیکچرار ہے اور لاءسیکنڈل کے مرکزی کردار اے ڈی عامر، مدثر مشتاق اور ملک صفدر کھوکھر کا دست راست ہے کے کالج کے 170 طلبہ کے نام بھی لسٹ میں شامل ہیں۔ غازی لاءکالج ڈی جی خان کے 63 اور پاکستان سکول آف لاءپاکپتن جس کا یونیورسٹی سے الحاق ہی نہیں کے 73 طلبہ کو غیر قانونی طور پر سابقوں تاریخوں میں بوگس انرولمنٹ جاری کی گئی ہیں۔ علاوہ ازیں یہ بھی معلوم ہوا ہے کہ اس بوگس لاءکالج کے مبینہ مالک نعیم نامی کلرک کو کرپشن پر لاءبرانچ سے نکالا گیا تھا اور وہ آجکل کنڈکٹ برانچ میں تعینات ہے، حیران کن طور پر 2019 بی اے، بی ایس سی کے سالانہ امتحان میں فیل ہونے والے تقریباً 400 طلباء و طالبات کو مبینہ طور پر جعلسازی سے پاس کرانے والے آفیسرز و اہلکار اسسٹنٹ کنٹرولر محمد امین، اسسٹنٹ کنٹرولر مظفر شاہ،اسسٹنٹ کنٹرولر اسلم کالیا ، مرکزی کردار اے ڈی عامر، رانا علیم، قاسم وغیرہ شامل ہیں کو سینڈیکیٹ نے معطل کرنے کی سفارشات جاری کیں مگر رجسٹرار صہیب راشد خان کی مبینہ سرپرستی اور مشاورت سے انہیں عدالتی سٹے لے کر تا حال من پسند سیٹوں پر تعینات کیا گیا ہے، ذرائع کے مطابق ان افسران و اہلکاران میں سے اکثر عموماً یونیورسٹی نہیں آتے بلکہ صرف تنخواہیں وصول کرنے مہینے میں ایک بار شکل دکھانے آ جاتے ہیں۔ایل ایل بی بوگس فیس ووچرز و بوگس رجسٹریشن سیکنڈل پر بنائی جانے والی (پروب) کمیٹی جس کے سربراہ ڈاکٹر عمر چودھری، ممبران ڈاکٹر محمد فاروق سابق کنٹرولر امتحانات و چودھری زاہد محمود ڈپٹی خزانہ دار نے کروڑوں روپے کی کرپشن کی رپورٹ سینڈیکیٹ کو ریفر کی جسے گزشتہ ماہ سنڈیکیٹ اجلاس میں پیش کیا گیا مگر رجسٹرار نے منظم پلاننگ کے تحت اپنے کارندوں کو بچانے کے لیے کانفیڈینشل رپورٹ نہ صرف لیک کرا دی بلکہ چند لاءکالجوں سے اس رپورٹ کو عدالت میں چیلنج بھی کرا دیا۔ ذرائع نے یہ بھی انکشاف کیا ہے کہ زکریا یونیورسٹی میں بطور اسسٹنٹ رجسٹرار لیگل محی الدین اصل میں باسکٹ بال کا کوچ ہے اور سابق رجسٹرار ملک منیر و ایمپلائز یونین کا کارندہ ہے، عدالتی معاملات رجسٹرار کے کہنے پر عدالتوں میں کمزور مو¿قف اپنا کر کرپٹ اہلکاروں کو بچایا جاتا ہے، واضح رہے کہ 8 لاءکالجز کے علاوہ باقی تمام لاءکالجز یونیورسٹی سے غیر الحاق شدہ ہیں اور الحاق شدہ کالجز کو بھی الاٹ کی گئی 100 سیٹوں سے زیادہ غیر قانونی طریقے سے بوگس انرولمنٹ کے ذریعے نوازا گیا۔ تعلیمی حلقوں نے حکام بالا سے فوری کارروائی کا مطالبہ کرت ہوئے کہا ہے کہ اس میگا کرپشن میں ملوث آفیسرز اور ملازمین کے خلاف فوری قانونی کارروائی کر کے نہ صرف سخت ترین سزا دی جائے بلکہ لوٹی ہوئی کروڑوں روپے کی رقم بھی وصول کی جائے تاکہ مالی بحران کا شکار جامعہ زکریا کو دیوالیہ ہونے سے بچایا جا سکے۔

مزید جانیں

مزید پڑھیں

صارفین کو ریلیف کی فراہمی کیلئے اقدامات اُٹھائے جارہے ہیں:محمد ارشد

حکومت پنجاب کی ہدایت پراشیاء ضروریہ کی مقررہ نرخوں پرفراہمی کو یقینی بنایاجائے لیہ( بیٹھک رپورٹ )ضلع میں صارفین کو ریلیف کی فراہمی کے لئے اقدامات اُٹھائے جارہے ہیں تاکہ صارفین کو سستی اشیاء خورد نوش فراہم کی جاسکیںاس سلسلہ مزید پڑھیں

اپنا تبصرہ بھیجیں