بالی ووڈ کے خانز نے پاکستانی فنکارہ نادیہ خان پر بھارت میں پابندی عائد کر دی ہے۔

کراچی: پاکستان کی مشہور میزبان اور اداکارہ نادیہ خان نے کہا ہے کہ بھارت میں پاکستانی فنکاروں کی مقبولیت کو دیکھ کر بالی ووڈ کے خانز (شاہ رخ خان، سلمان خان، عامر خان) نے ان پر پابندی لگا دی۔حال ہی میں نادیہ خان نے ایک ٹی وی پروگرام میں کہا کہ جب ہمارے فواد خان جیسے فنکاروں نے بھارت میں کام کرنا شروع کیا اور وہ بھارتی عوام میں مقبول ہوئے تو اس وقت بالی ووڈ کے بڑے ستارے پاکستانی اداکاروں اور بھارتی سیاستدانوں سے خوفزدہ تھے، انہیں بھی مسائل کا سامنا کرنا پڑا، پھر انہوں نے کہا۔ سیاسی رنگ دیا اور بھارت میں ہمارے اداکاروں پر پابندی لگا دی۔انہوں نے کہا کہ وہ اس بات سے نہیں ڈرتے کہ پاکستانی فنکاروں کو بھارت میں فلموں کی پیشکش کی جائے گی، لیکن یہ دیکھ کر ڈر لگتا ہے کہ بھارتی لوگ پاکستانی فنکاروں کے دیوانے ہیں۔ نادیہ خان نے کہا کہ ہماری اداکارائیں اپنی فلموں اور ڈراموں میں اپنی باڈی نہیں دکھاتی، فائٹ سین نہیں کرتیں بلکہ اپنی آنکھوں، پرفیکٹ ڈائیلاگ ڈیلیوری اور صاف اردو سے شائقین کے دل جیت لیتی ہیں۔اداکارہ نے کہا کہ بھارت کے لوگ پاکستانی ستاروں کے دیوانے ہیں، وہ ہمارے اداکاروں سے پیار کرتے ہیں، وہاج علی اور بلال عباس کے حالیہ ڈراموں کو بھارت میں کافی پذیرائی ملی جس کی وجہ سے وہاں کے لوگ ان اداکاروں کے دیوانے ہو گئے ہیں۔ان کا مزید کہنا تھا کہ بالی ووڈ کے خانز (شاہ رخ خان، سلمان خان اور عامر خان) کو ڈر تھا کہ اگر یہ نوجوان پاکستانی لڑکے ان کی انڈسٹری میں آئے تو ان کا کریئر مشکل میں پڑ جائے گا کیونکہ ہماری عمر کے کچھ نوجوان اداکار مقبول نہیں ہیں۔ کہ ماہرہ خان، فواد خان، عاطف اسلم، علی ظفر، عمران عباس اور دیگر پاکستانی ستاروں نے بھی بالی ووڈ میں کام کیا ہے اور ان ستاروں کو بھارتی عوام کی جانب سے بھی بہت پیار ملا ہے۔

اپنا تبصرہ لکھیں