سعودی عرب؛ بیوی کو قتل کر کے دوسری شادی کرنے والا شخص 38 سال بعد گرفتار کر لیا گیا۔

“ریاض: سعودی عرب میں ایک شخص نے بیوی کو قتل کرنے کے بعد بیڈ روم میں فرش کھود کر لاش کو ٹائلوں سے دفن کردیا۔ پھر تشدد کا نشانہ بننے کے بعد اس نے اپنی بھابھی سے شادی کی لیکن یہ شادی 38 سال بعد ٹوٹ گئی۔”
عرب نیوز کے مطابق 38 سال قبل گھریلو جھگڑے کے دوران شوہر کے تشدد کے باعث بیوی کی موت ہوگئی تھی، اس موقع پر قاتل شوہر نے فرش کو مضبوط کرنے کے لیے بستر کے نیچے فرش کھود کر لاش کو دفن کردیا۔ بتایا گیا کہ ان کی اہلیہ کی موت کینسر کے باعث ہوئی ہے اور اگر اسے جلد نہ دفنایا گیا تو لاش گل جائے گی۔قاتل شوہر جب سسرال آیا تو اس نے ایسا حیرت انگیز ڈرامہ رچایا کہ کوئی اس کا جھوٹ نہ پکڑ سکا، اس کی بجائے اس کی ساس نے اس کی دوسری بیٹی سے شادی کروا دی۔سیلی کو بھی 38 سال تک احساس نہیں ہوا کہ وہ اپنی بہن کے قاتل کے ساتھ رہ رہی ہے لیکن قدرت قاتل کو بے نقاب کرنا چاہتی تھی اور گھر میں بیت الخلا بنانے کے لیے کھدائی کرنے والے مزدوروں کو انسانی ہڈیاں مل گئیں۔کارکنوں نے پولیس کو اطلاع دی۔ ہڈیوں کے ڈی این اے سے معلوم ہوا کہ باقیات پہلی بیوی کی ہیں۔ موجودہ بیوی اور بھابھی پر راز کھلا تو وہ بے ہوش ہو گئیں۔

اپنا تبصرہ لکھیں